☰  
× صفحۂ اول (current) دین و دنیا رپورٹ متفرق خصوصی رپورٹ شخصیت فیشن سنڈے سپیشل کچن کی دنیا کھیل انٹرویوز خواتین روحانی مسائل
Dunya Magazine
Loading...
Loading...
Loading...

دیگر خصوصی مضامین اور مستقل سلسلے

حضرت ابو ہریرہ ؓکہتے ہیں کہ آنحضرت ﷺ نے فرمایا : 

’’ ہر بچہ اپنی فطرت (یعنی اسلام ) پر پیدا ہوتا ہے ، پھر اس کے والدین اسے یہودی یا مجوسی یا نصرانی بنا دیتے ہیں ‘‘۔ (صحیح البخاری )

 

مزید پڑھیں

بھارت دنیا کی امیر ترین سابق ریاست حیدر آبادکا کئی سو ارب ڈالر کا قروض ہے۔ چند روز قبل اس ریاست کے والی، وارثان 35ملین پائونڈ کا کیس جیت گئے ہیں جس کا بھارت بھر میںپروپیگنڈا کیا جا رہاہے۔حالانکہ یہ کیس بھارت بھی ہار گیا ہے کیونکہ عدالت نے 35ملین پائونڈبھارت کو دینے کی بجائے وارثان کو حق دار ٹھہرایا ہے۔

مزید پڑھیں

ایک تحقیق کے مطابق ہر4 بالغ افراد میں سے1 اور ہر 10 بچوں میں سے 1کو دماغی امراض یا مسائل کا سامنا ہے۔ کسی ایک انسا ن کے دماغی مرض سے صرف وہی نہیں بلکہ اس سے وابستہ دیگر افراد بھی متاثر ہوتے ہیںپاکستان سمیت دنیا بھر میں ذہنی و نفسیاتی مریضوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے ۔عالمی ادارہ صحت کا کہناہے کہ دنیا بھر میں45کروڑ افراد کسی نہ کسی دماغی عارضے میں مبتلا ہیںجن میں سب سے زیادہ پائی جانے والی دماغی بیماریاں ڈپریشن اور شیزو فرینیا ہیں۔

مزید پڑھیں

بڑے ممالک نے انسانیت کو مارنے کے لئے ہزاروں طاقتور ایٹمی ہتھیار تیارکر رکھے ہیں،اس دوڑ میں کوئی کسی سے پیچھے نہیں ۔ 13900ایٹمی ذخائر میں سے 93فیصد مہذب ممالک (امریکہ اور روس)کے پاس ہیں۔ان دونوں ممالک نے ایٹمی عدم پھیلائو کے معاہدے پر دستخط نہیں کئے۔باقی ماندہ 7ممالک کے ذخیرے میں بارہ سو ایٹم بم محفوظ ہیں۔2025

مزید پڑھیں

یہ ایک بڑا پیچیدہ سوال ہے کہ آخر انسان کی کایا کلپ (Metaphorsis) کیوں ہو جاتی ہے۔ کیوں انسان ایک مثبت راستے کو یکایک چھوڑ کر منفی راستے پر چل پڑتا ہے؟ ماہر نفسیات کا اس سلسلے میں کہنا ہے کہ انسان کی کایا کلپ ایک دن میں نہیں ہو جاتی۔ یہاں کایا کلپ سے مراد نظریات کا تبدیل ہونا ہے۔

مزید پڑھیں

٭:عالمی سطح پر سیاسی اور اقتصادی بے یقینی بڑھ رہی ہے: آئی ایم ایف کا اعتراف۔۔۔مقبوضہ کشمیر میں موت کا خوف ختم ہوچکا اور اب’’ بے خوفی‘‘جنم لے چکی ہے ۔۔۔کیا برصغیر میں زندگی سے محبت کا تصور بدل رہا ہے ۔۔۔؟بات لائن آف کنٹرول کی طرف چل نکلی ہے۔۔۔ اب دیکھیں کہاں تک پہنچے۔۔۔

مزید پڑھیں

دہی بینگن گریوی

اجزاء:چھوٹے بینگن چھ عدد،سرکہ دو کھانے کے چمچ،بھنا زیرہ ایک چائے کا چمچ،نمک1/2چائے کا چمچ،لال مرچ ایک چائے کا چمچ،تیل فرائنگ کے لیے، (دہی گریوی کے لیے)دہی ایک پائو،فرائی پیاز1/2کپ،ٹماٹر دوعدد،پسی لال مرچ دو چائے کے چمچ،ہلدی1/2چائے کا چمچ،نمک1/2چائے کا چمچ،ہرا دھنیا،ہری مرچ حسب ضرورت

مزید پڑھیں

تین مارچ 2009، سری لنکا کی کرکٹ ٹیم پاکستان کے دورہ پر تھی ۔ لاہور کے قذافی سٹیڈیم میں پاکستان اور سری لنکا کے درمیان کھیلے جانے والے ٹیسٹ میچ کا تیسرا دن شروع ہونا تھا۔ مقامی وقت کے مطابق صبح نو بجے 12 دہشت گردوں نے لبرٹی چوک کے قریب مہمان کرکٹ ٹیم پر حملہ کر دیا۔اس واقعے میں حفاظت پر معمور 6 پولیس اہلکار اور ایک ڈرائیور جاں بحق ہوگئے تھے۔اس حملہ میں سری لنکا کے چھ کھلاڑی اور پاکستان کے امپائر احسن رضا پیٹ میں گولیاں لگنے سے زخمی ہوئے۔

مزید پڑھیں

ایک دور تھا کہ جب ہر لڑکی اپنے فنی کیریئر کا آغاز فلم انڈسٹری سے کرنا باعث اعزاز سمجھتی تھی ،فیشن انڈسٹری سے دور رہنے میں بہترخیال کرتی ،وقت بدلا فلم انڈسٹری بحرانی دور کا شکار ہوئی اور سینما انڈسٹری کا بھی برا دور شروع ہوا ، اچھے و معیار ی سینما گھر بھی گرادیئے گئے، ان کی جگہ شاپنگ مال، رہائشی پلازے، تھیٹر ہال بننے لگے ۔

مزید پڑھیں

 چند غذائیں جنہیں کبھی محفوظ نہ کریں

 

روزانہ کھانا پکانے والی خواتین اکثر اپنی آسانی کی خاطر کھانے میں استعمال ہونے والی چیزوں کو فریزر میں کافی مقدار میں محفوظ کر لیتی ہیں۔اس کی ایک وجہ یہ بھی ہوتی ہے کہ بار بار بازار کاچکر نہ لگانا پڑے اور اکٹھی چیزیں خر ید لی جائیں،بہت سی چیزیں ایسی ہیں جنہیں کافی دن تک فریج میں رکھنے سے بھی ان کی افادیت پر کوئی اثر نہیں پڑتا نہ ہی ان کا ذائقہ تبدیل ہوتا ہے،لیکن چند چیزیں ایسی بھی ہیں جنہیں زیادہ دن تک فریزیز میں محفوظ رکھنے کے کئی نقصانات ہیں۔آئیے ان چیزوں اور ان کے نقصانات کے بارے میں آپ کو قدرے تفصیل سے بتائیں۔

 

مزید پڑھیں

دودھ کا دودھ پانی کا پانی

یہ معروف کہاوت ایسے موقع پر بولی جاتی ہے جب سچ اور جھوٹ الگ ہوجائیں اور کسی کو اس کے اچھے یا برے کام کا بدلا ملے۔اس کا قصہ یوں ہے کہ ایک گوالا بڑا بے ایمان تھا اور دودھ میں پانی ملا کر بیچا کرتا تھا۔ بہت جلد اس نے اچھے خاصے پیسے جمع کر لئے۔ ایک روز اس نے ساری رقم ایک تھیلی میں ڈالی اور اپنے گاؤں کی طرف چلا۔ گرمی کا موسم تھا۔ پسینہ چوٹی سے ایڑی تک بہہ رہا تھا۔ گوالے کے راستے میں ایک دریا پڑا۔ اس نے سوچا چلو نہا لیتے ہیں۔ رپوں کی تھیلی اس نے ایک درخت کے نیچے رکھی۔ تھیلی پر کپڑے ڈال دئیے اور لنگوٹ کس کر پانی میں کود پڑا۔ اس علاقے میں بندر بہت پائے جاتے تھے۔ اتفاق کی بات ایک بندر درخت پر چڑھا یہ ماجرا دیکھ رہا تھا۔ گوالے کے پانی میں اترتے ہی بندر درخت سے اترا اور رپوں کی تھیلی لے کر درخت کی ایک اونچی شاخ پر جا بیٹھا۔ گوالا پانی سے نکلا اور بندر کو ڈرانے لگا، لیکن بندر نے تھیلی کھولی اور رپے ایک ایک کر کے ہوا میں اڑانے لگا۔ درخت دریا کے کنارے سے بہت قریب تھا اور رپے اڑ اڑ کر پانی میں گرنے لگے۔ گوالے نے رپوں کو پکڑنے کی بہت کوشش کی، لیکن پھر بھی آدھے رپے پانی میں جا گرے۔ راستہ چلتے لوگ جو گوالے کی بے ایمانی سے واقف تھے اور یہ تماشہ دیکھنے جمع ہوگئے تھے گوالے کی چیخ و پکار سن کر کہنے لگے، ’’دودھ کا دودھ پانی کا پانی ہوگیا۔’’ یعنی گوالے نے جو آدھے پیسے دودھ میں پانی ملا کر بے ایمانی سے کمائے تھے وہ پانی میں مل گئے۔

مزید پڑھیں

جنات سے حفاظت

حضرت عبداللہ بن یسر ؓفرماتے ہیں ، میں خمص سے چلا اور رات کو زمین کے ایک خاص ٹکڑے میں پہنچا تو اس علاقہ کے جنات میرے پاس آگئے اس پر میں نے سورئہ اعراف کی یہ آیت آخر تک پڑھی :

مزید پڑھیں

دے جو شکست مجھ کو کسی میں وہ دم نہیں ۔۔۔

دنیا فیشن

ماڈل : ثناء
فوٹو گرافی : عامر چشتی
میک اپ : K R CREW