☰  
× صفحۂ اول (current) سنڈے سپیشل(طیبہ بخاری ) سپیشل رپورٹ(طاہر اصغر) دنیا اسپیشل(صہیب مرغوب) دین و دنیا(ڈاکٹر آصف محمود جاہ ) کچن کی دنیا فیشن(طیبہ بخاری ) کھیل(عبدالحفیظ ظفر) خواتین متفرق(رضوان عطا) کیرئر پلاننگ(پرفیسر ضیا ء زرناب) ادب(الیکس ہیلی ترجمہ عمران الحق چوہان)
ماہِ صیا م اور گھر کے انتظام

ماہِ صیا م اور گھر کے انتظام

تحریر :

05-12-2019

اگر آپ کے گھر رات کے کھانے یا افطاری پر مہما ن آ رہے ہیں اور مصروفیت کے باعث آپ گھر کی صفائی نہیں کر سکیں تو اس کے لیے پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ۔آپ45منٹ سے بھی کم وقفے میں اپنا گھر مہمانوں کی آمد سے قبل صاف کر سکتی ہیں۔

سب سے پہلے اپنی بکھری چیزوں کو جلدی سے سمیٹ کر انہیں مخصوص جگہ پر رکھیں۔دراصل اتنے مختصر وقت میں پورا گھر سمیٹنا مشکل ہو گا۔آپ کو چاہیے کہ ڈاوننگ روم،لیونگ روم ،کچن اور باتھ روم کی صفائی پہلے کریں،کیونکہ یہ ایسی جگہیں ہیں جہاں مہمانوں کی آمدورفت رہتی ہے۔اگر آپ کے پاس جھاڑو لگوانے کا وقت نہیں تو چیزیں سمیٹ کر ویکیوم کر لیں۔ اکثر اوقات مشاہدے میں آیا ہے کہ مہمان فرش کی بجائے میزوں اور شیلف پر زیادہ توجہ مرکوز کرتے ہیں۔

ویسے بھی مہمانوںکے ساتھ آنے والے بچے ہڑبونگ مچاتے ہیں کہ فرش پل بھر میں ہی گندا ہو جاتا ہے۔آپ صفائی کے ہر ایریا کو پندرہ منٹ سے زیادہ وقت نہ دیں،اور اس کے لیے ٹائم مقرر کر لیں۔ کمرے کی کھڑکیاں تھوڑی دیر کے لیے کھول دیں تا کہ تازہ ہوا کا گزر ہو۔ایسا کرنے سے کمرے میں ایک خوشگوار ماحول پیدا ہو گا۔ آج کل چونکہ ماربل کے فرش کا رواج عام ہے کیونکہ یہ خوبصورتی کو چار چاند لگا دیتا ہے۔

اگر آپ کے کمروں ،کچن ،باتھ روم اور دیواروں پر بھی ماربل لگا ہوا ہے تو صفائی کرنا اور بھی آسان ہو جائے گا۔دیکھنے میں جاذ ب نظر لگنے والے یہ ماربل گھر کو خوبصورت بنا دیتے ہیں۔چونکہ یہ میلے بھی جلد ہو جاتے ہیں لہٰذا روزانہ صفائی نہ کرنے سے گھر کی خوبصورت ماند پڑ سکتی ہے۔ماربل کی صفائی سے پہلے آپ کے لیے دو باتوں کوجان لینا نہایت ضروری ہے۔ایک تو یہ کہ گرینائٹ سخت قسم کا پتھر نہیں ہوتا۔

اکثر لوگ ان دونوں کوایک ہی سمجھ بیٹھتے ہیں۔جبکہ ماربل اور گرینائٹ میں بہت زیادہ فرق ہوتا ہے۔یہ گرینائٹ کے مقابلے میں بہت زیادہ نرم ہوتا ہے۔اس لیے اس پر داغ اور گرد کے نشان بہت جلدی لگتے ہیں۔یاد رکھیں کہ ماربل کو صاف کرنے کے لیے کبھی بھی سرکہ اور اس پر مبنی بازاری پروڈکٹس کا استعمال نہ کریں۔ بازار میں دستیاب کسی بھی قسم کے کلینر کو ماربل پر استعمال نہ کریں ۔ اس سے ماربل کی اوپری سطح خراب ہو سکتی ہے اور رنگ بھی پھیکے پڑ سکتے ہیں۔آپ اگر ایک سگھڑ خاتون ہیں تو اس بات کو ضرور ذہن میں رکھیں کہ ضروری نہیں جس دن گھر میں ڈنر یا کسی فنکشن کا اہتمام ہو تب ہی گھر کی مکمل صفائی کی جائے بلکہ آپ یہ کام سہولت کے ساتھ دو یا تین دن قبل بھی مختصر وقت نکال کے کر سکتی ہیں۔

مزید پڑھیں

ماہِ رمضان کا آغاز ہو چُکا ہے اور افطار کے وقت کس کا دل نہیں کرتا کہ دستر خوان پر پھل نہ سجے ہوں۔ اگر تو آپ رمضان کے دوران اپنے جسم کو صحت مند بنانا چاہتے ہیں تو بازار میں عام دستیاب ان چند پھلوں کو افطار میں استعمال کرنا اپنی عادت بنا لیں جن کے فوائد آپ کو حیران کر دیں گے۔

مزید پڑھیں

گذشتہ شماروں سے پڑھیں

فراغت کے باعث ڈپریشن کا شکار ہونے سے بچیں
کورونا وائرس سے بچائو کے پیشِ نظر حکومتی اقدامات پر عمل کرتے ہوئے بیشتر لوگ پچھلے کئی روز سے گھروں میں مقید ہیں۔مصروف زندگیوں میں آنے والے اس قدر بڑے بدلائو کو اکثر لوگ آسانی سے قبول کر رہے ہیں ،جبکہ بعض کے لیے اس طرزِ زندگی کو اپنانا مشکل ہو رہا ہے،اور بدلائو ان کے ذہن پر اس قدر سوار ہونے لگا ہے کہ وہ ڈپریشن کا شکار ہو رہے ہیں۔
 

مزید پڑھیں

 

چینی کا بہترین متبادل
 

خالص گنے کے رس سے تیار کیے جانے والے گڑ کو چینی کا بہترین متبادل کہا جائے تو ہر گز غلط نہیں ہو گا۔گڑ میں کیروٹین،نکوٹین،تیزاب،وٹامن بی ون،وٹامن بی ٹو ،وٹامن سی کے ساتھ ساتھ آئرن اور فاسفورس وافر مقدار میں موجود ہوتا ہے۔
 

مزید پڑھیں

جس طرح ہر چیز کے مثبت اور منفی پہلو ہوتے ہیں اسی طرح سوشل میڈیا کے بھی مثبت اور منفی پہلو اس کے استعمال پر منحصر ہیں۔ اگر مثبت پہلو کی بات کی جائے تو سوشل میڈیا کئی لحاظ سے ہر ایک کے لیے مفید ہے۔ چند پہلو درج ذیل ہیں۔
 

 

مزید پڑھیں
`